بلوچستان کے ضلع قلعہ عبداللّٰہ میں پانی کے دباؤ سے تین ڈیم ٹوٹ گئے۔ ڈپٹی کمشنر کے مطابق ماچھکا ون، ٹو اور ماچھکا تھری ڈیم ٹوٹ گئے ہیں۔ 

انہوں نے بتایا کہ توبہ اچکزئی اور پہاڑی سیلابی ریلوں سے تینوں ڈیم بھر گئے تھے۔ تمام علاقوں کے مکینوں کو محفوظ مقامات پر منتقل ہونے کی ہدایت کی گئی ہے۔

مقامی اسسٹنٹ کمشنر نے بتایا کہ لیویز کی ریسکیو ٹیمیں لوگوں کو محفوظ مقام پر منتقل کرنے میں مصروف ہیں۔ قلعہ عبداللّٰہ کے علاقوں حبیب زئی، میزئی اور مختلف علاقوں میں سیلابی صورتحال پیدا ہوگئی ہے۔

ڈی سی منیر کاکڑ کے مطابق حبیب زئی میں بڑی تعداد میں لوگ سیلابی ریلے میں پھنس گئے ہیں۔ سیداں میں ٹریکٹر ٹرالی بہہ گئی، جس میں 20 سے زائد افراد سوار تھے۔ 

انہوں نے کہا کہ بہہ جانے والے افراد کو ریسکیو کرنے کے لیے آپریشن جاری ہے۔ جبکہ لاجور کے علاقے میں ریلوے پٹری سیلابی ریلے میں بہہ گئی۔ جبکہ کوئٹہ اور چمن کے درمیان ٹرینوں کی آمدورفت معطل ہے۔ 

ڈی سی کا کہنا تھا کہ سیلاب سے اب تک 4 افراد جاں بحق ہوئے ہیں اور جنگل پیر علی زئی کے علاقے میں تین پل بہہ گئے۔



Leave a Reply

Your email address will not be published.