وفاقی وزیر میری ٹائم افیئرز فیصل سبزواری کا کہنا ہے کہ شہباز گل خوش قسمت ہیں کہ فیصل آباد سے تعلق ہے، ہم پر ایک ٹیلی فون گفتگو سننے اور تالی بجانے پر دہشتگردی کے مقدمات بنے، ہم نے کیا دہشت گردی کی تھی؟

کراچی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے فیصل سبزواری نے کہا کہ ہم پر عام لوگوں کو تشدد پر اکسانے پر مقدمے بنے، شہباز گل پر جوانوں کو اکسانے پر کیا دہشت گردی کا مقدمہ بنا؟  کہتے ہیں اظہار رائے ہے،  کراچی کے بچے اور کسی دوسرے علاقے کے لوگوں کے ساتھ الگ سلوک ہے،  فوج کے حوصلوں کو کمزور کرنے کی کوشش ہو رہی ہے۔

فیصل سبزواری نے کہا کہ شہباز گل نے خود نہیں پوری منصوبہ بندی سے ہرزہ سرائی کی، اینکر کو بھی کہہ دیا گیا کہ بیٹا خاموش رہنا ہے، ہیلی کاپٹر حادثے کے معاملے پر بھی بدتمیزی کی گئی۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ حکومت کے ساتھ ایم کیو ایم کا گورنر اور ایڈمنسٹریٹر سے متعلق کوئی معاہدہ نہیں ہوا تھا، شہری سندھ سے نمائندگی پر زور دیا تھا۔

فیصل سبزواری نے کہا کہ بینکس میں رکھے گئے پیسوں پر سود کو ادارے کا منافع نہیں سمجھتا، اگلے ایک سال میں کے پی ٹی کا منافع کم از کم دگنا ہوگا، پورٹ قاسم پر ایک نیا کنٹینر ٹرمینل تعمیر ہوگا، ایل این جی کا نیا ٹرمینل بھی بنائیں گے، گوادر پورٹ پر ڈریجنگ جلد شروع ہوگی، گوادر میں ماہی گیروں کے لیے31 دسمبر تک فلوٹنگ جیٹی تعمیر ہوجائے گی، گوادر پورٹ کو یکم اگست سے کراس اسٹفنگ کی اجازت دے دی ہے۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ مائی کولاچی ٹریٹمنٹ پلانٹ لگانے کی ذمہ داری کے پی ٹی نے لے لی ہے، پورٹ قاسم کی 49 کلو میٹر طویل ڈریجنگ 8 سال سے نہیں ہوئی، میں ان وجوہات میں نہیں جاؤں گا کہ ایل این جی ٹرمینل کیوں نہیں بنا، کیوں کے پی ٹی میں بلک ٹرمینل نہیں بنا؟ وجوہات نہیں جاننا کیوں ڈریجنگ کا کام روکا گیا، مچھر کالونی کو کوسٹل ڈیولپمنٹ سے نکال دیا ہے کیونکہ خالی کروانا ممکن نہیں ہے۔

فیصل سبزواری نے کہا کہ  لیاری ایکسپریس وے سے متصل ایلیویٹڈ فریٹ کوریڈور بنائیں گے، کراچی پورٹ صرف سات گھنٹے آپریٹ کرتی ہے جس کو بڑھانے کی ضرورت ہے، پی این ایس سی بورڈ خود مختار ہے لیکن جواب دہ بھی ہے، 14 سال پرانے جہازوں کی خریداری پر سوالات موجود ہیں، سابق وزیر میری ٹائم نے اپنے لیے تین دفاتر بنائے تھے، اب کے پی ٹی اور پورٹ قاسم میں وفاقی وزیر کا کوئی دفتر نہیں ہوگا۔



Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *