آٹھ سال بعد پی ٹی آئی ممنوعہ فنڈنگ کیس کا فیصلہ آج سنایا جائے گا، الیکشن کمیشن صبح 10 بجے فیصلہ سنائے گا۔

پاکستان تحریک انصاف کا مستقبل کیا ہوگا؟ پارٹی کی رجسٹریشن منسوخ ہوگی؟، عمران خان پر غلط بیانِ حلفی دینے پر آرٹیکل 62 ون ایف کا اطلاق ہوگا یا پھر فوجداری مقدمات قائم کیے جائیں گے؟

پی ٹی آئی ممنوعہ فنڈنگ کیس کا فیصلہ رواں سال 21 جون کو محفوظ کیا گیا تھا۔

الیکشن کمیشن میں تحریک انصاف ممنوعہ فنڈنگ کیس 2014 سے چل رہا تھا، کیس پی ٹی آئی کے بانی رکن اکبر ایس بابر نے دائر کیا تھا۔

درخواست گزار نے بیرون ملک سے پارٹی فنڈنگ میں بے قاعدگیوں کی نشاندہی کی تھی۔

تحریک انصاف کی ممنوعہ فنڈنگ کیس کے فیصلے کے موقع پر اسلام آباد کے ریڈزون میں سیکیورٹی ہائی الرٹ کردی گئی ہے۔

ایکسپریس چوک اور نادرا چوک سے ریڈ زون میں انٹری بند کردی گئی ہے۔ چیف الیکشن کمشنر کی سیکیورٹی کے فول پروف انتظامات کی ہدایت کی گئی ہے۔

ذرائع کے مطابق ممنوعہ فارن فنڈنگ فیصلے کے موقع پر پولیس اور ایف سی کے ایک ہزار جوان ڈیوٹی پر مامور ہوں گے۔ سیاسی جماعتوں کے کارکنان کو داخلے کی اجازت نہیں ہوگی۔



Leave a Reply

Your email address will not be published.