[ad_1]

فوٹو: سوشل میڈیا
فوٹو: سوشل میڈیا

سروسز اسپتال لاہور کے ڈاکٹروں نے پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) رہنما ڈاکٹر یاسمین راشد کو پولیس کے حوالے کرنے سے انکار کردیا۔ ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ یاسمین راشد کو سانس لینے میں دشواری کے باعث بائی پائپ لگا ہوا ہے، ان کے چیسٹ، ناک اور گلے کے سٹی اسکینز کروالیے گئے ہیں۔ وہ دمہ کی مریضہ ہیں اور انہیں چیسٹ انفیکشن بھی ہے۔

پی ٹی آئی رہنما یاسمین راشد سانس لینے میں دشواری کے باعث گزشتہ روز سے سروسز اسپتال لاہور میں زیرِ علاج ہیں۔

اسپتال انتظامیہ کے مطابق انہیں وی وی آئی پی بلاک میں رکھا گیا ہے، پولیس یاسمین راشد کو حراست میں لینے کےلیے سروسز اسپتال پہنچی، جس نے اسپتال انتظامیہ کو بتایا کہ یاسمین راشد کے خلاف سرور روڈ، گلبرگ اور شادمان تھانوں میں دہشتگردی سمیت دیگر سنگین دفعات کے تحت 3 مقدمات درج ہیں، انہیں عدالت میں پیش کرنا ہے، حوالے کیا جائے۔

میڈیکل بورڈ نے ڈاکٹر یاسمین راشد کو پولیس کے حوالے نہ کیا اور بتایا کہ ان کے سی ٹی اسکین کیے گئے ہیں، طبیعت میں بہتری آنے پر ہی انہیں ڈسچارج کیا جائے گا۔

پولیس یاسمین راشد کی میڈیکل رپورٹس لے کر واپس لوٹ گئی۔

بتایا گیا ہے کہ یاسمین راشد کا کچھ عرصہ قبل کینسر کا آپریشن بھی ہوچکا ہے۔



[ad_2]

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *