افغان ناظم الامور کو دفتر خارجہ طلب کرکے کابل میں ہیڈ آف مشن پر حملے پر تشویش اور غم و غصہ کا اظہار کیا گیا ہے۔

ترجمان دفترخارجہ کا کہنا ہے کہ حملے میں ہیڈ آف مشن محفوظ رہے تاہم سپاہی اسرار زخمی ہوگئے۔

ترجمان کا کہنا ہے کہ سفارتی مشنز اور عملے کی حفاظت حکومت کی ذمہ داری ہے، ہیڈ آف مشن پر حملہ انتہائی سنگین سیکیورٹی کوتاہی ہے، حملے کے مرتکب افراد کو فوری انصاف کے کٹہرے میں لایا جائے۔

ترجمان دفتر خارجہ کا مزید کہنا تھا کہ سفارت خانے کے احاطے کی سیکیورٹی خلاف ورزی کی تحقیقات کی جائیں، سفارتی احاطے، عملے کی حفاظت یقینی بنانے کے لیے تمام اقدامات کیے جائیں۔

اس موقع پر افغان ناظم الامور نے کہا کہ حملہ انتہائی افسوسناک ہے، یہ حملہ پاکستان اور افغانستان کے مشترکہ دشمنوں نے کیا، افغان قیادت نے اعلیٰ سطح پر حملے کی سخت ترین الفاظ میں مذمت کی۔

افغان ناظم الامور کا مزید کہنا ہے کہ پاکستانی سفارتی مشنز کی سیکیورٹی پہلے سے زیادہ سخت کر دی گئی، مرتکب افراد کو انصاف کے کٹہرے میں لانے میں کوئی کسر نہیں چھوڑیں گے۔



Leave a Reply

Your email address will not be published.