رانا ثناء کی گورنر راج لگانے کی دھمکی پر فواد چوہدری کا ردعمل


رانا ثناء کی گورنر راج لگانے کی دھمکی پر فواد چوہدری کا ردعمل

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی ) کے رہنما فواد چوہدری نے کہا ہے کہ غیر سیاسی لوگ ہیں، عقل نہیں ہے، رانا ثناء اللّٰہ کی پریس کانفرنس دیکھیں، شرم آتی ہے، وہ گورنر رولز کی شق پڑھ لیں کہ گورنر راج کن حالات میں لگتا ہے۔

اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے فواد چوہدری نے کہا کہ سپریم کورٹ کا فیصلہ تاریخی فیصلہ ہے، اسی بینچ کے فیصلے پر عمران خان کو جانا پڑا تھا، فیصلے پر ہمارے تحفظات ہیں، کور کمیٹی میں فیصلہ کرنا ہے کہ اسلام آباد میں کب تبدیلی لانی ہے۔

انہوں نے کہا کہ موجودہ الیکشن کمشنر کی موجودگی میں صاف شفاف انتخابات ممکن نہیں، موجودہ الیکشن کمشنر میں شرم اور حیا ہو تو مستعفی ہوجائیں، اگر ہم نے اس حکومت کو ری ایکٹ کیا تو یہ نہیں رہ سکیں گے، وفاقی حکومت کو فارغ کرنا مشکل نہیں ہے۔

فواد چوہدری کا کہنا ہے کہ ڈپٹی اسپیکر کے انتخاب کے بعد پنجاب کی کابینہ حلف اٹھائے گی، تحریک انصاف سوائے سندھ کے پورے ملک میں حکومت قائم کر چکی ہے، تین مہینے پہلے انہی تین ججز نے فیصلہ کیا تھا جس پر عمران خان کو حکومت سے جانا پڑا تھا۔

سابق وفاقی وزیر نے کہا کہ ن لیگ ناراض لیگ بن رہی ہے، دباؤ میں ن لیگ کی پوری قیادت بکھر گئی ہے، ہم چاہتے ہیں کہ الیکشن کے فریم ورک پر بات ہو، وفاقی حکومت وینٹیلیٹر کے اوپر ہے۔

ان کا کہنا ہے کہ جی بی، آزاد کشمیر، کے پی اور پنجاب میں تحریک انصاف کی حکومت ہے، رانا ثناء اللّٰہ اور مریم اورنگزیب جیسے لوگ غیرسیاسی لوگ ہیں، ن لیگ احمقانہ پالیسی پر گامزن ہے، ان کی سیاست ختم ہوگئی ہے۔

واضح رہے کہ وفاقی وزیر داخلہ رانا ثناء اللّٰہ نے پنجاب میں گورنر راج لگانے کی دھمکی دیتے ہوئے کہا ہے کہ گورنر راج کی سمری پر کام شروع کردیا۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے رانا ثناء اللّٰہ نے کہا کہ پنجاب میں ان کے داخلے پر پابندی گورنر راج کے نفاذ کا جواز ہو گا۔